یہ میلہ جہالت کے خلاف جنگ ہے ، انتظامیہ

book fairبچوں کے ناول نگار اشتیاق احمد کا اپنے اسٹال کا دورہ ،لوگوں میں گھل مل گئے ۔ایکسپو سینٹر میں جاری گیارہواں عالمی کتب میلہ پیر تک جاری رہے گا، تیسرے روز بھی ہزاروں افراد کی آمد ہوئی بڑی تعداد میں کتب فروخت ہوئیں، شرکاء کی تعداد میں کئی گنا اضافہ دیکھنے میں آیا ۔ میلے میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کراچی انٹر نیشنل بک فیئر کے چیئرمین عزیز خالد نے کہا کہ ایک اندازے کے مطابق لاکھوں روپوں مالیت کی خریداری ہوچکی ہے جس میں اضافے کا امکان ہے ،جو مائیں اپنے بچوں کے ساتھ کتب میلے میں آئیں اور انہوں نے بچوں کو کتب دلائیں وہ ثابت کرتی ہیں کہ وہ پڑھی لکھی مائیں ہے اور انہیں کتاب کی اہمیت کا اندازہ ہے ۔ہفتے کے دن صبح سے ہی میلے میں رش تھا، بک فیئر کے کو آرڈی نیٹرشیخ عالمگیر کے مطابق کتب میلے میں افسانہ، ناول، ادب، شاعری اور سیاست کی کتابوں میں دلچسپی دیکھنے میں آرہی ہے یہ کتب میلہ جہالت کے خلاف جنگ ہے ۔ایکسپو سینٹر انتظامیہ کے مطابق سارے پارکنگ ایریا بھر چکے ہیں اور پارکنگ کی بالکل جگہ نہیں ہے ۔دریں اثنا بچوں کے مشہور رائٹر اشتیاق احمد نے بھی اپنے اسٹال کا دورہ کیا اور لوگوں کے درمیان گھل مل گئے ۔میلے کے تیسرے دن مختلف پبلشرز کی سرگرمیاں ہوئیں جن میں آکسفورڈ یونیورسٹی پریس کی جانب سے نقلی کتابوں کے حوالے سے لوگوں میں شعور پیدا کیاگیا۔ انجمن خدام القران کی طرف سے کتاب کی اہمیت پر فلم پرو جیکٹر پر دکھائی گئی۔ یہ کتب میلہ آج  شام تک جاری رہے گا۔