23اسلام آباد(5اگست2015ء)نیشنل بُک فاؤنڈیشن بُک کلچر کے فروغ اور علم کی ترویج میں اہم خدمات سر انجام دے رہا ہے۔ یہ قومی ادارہ ایک تحریک کی شکل میں’’ بُک ریوولیوشن‘‘ کے ذریعے مثبت قومی سوچ کو بھی فروغ دے رہاہے۔ یہ باتیں ممبرقومی اسمبلی ،منسٹری آف سٹیٹس اینڈ فرنٹیرریجنز کی پارلیمانی سیکرٹری اور ممبر سٹینڈنگ کمیٹی برائے پورٹس، شپنگ پلاننگ اینڈڈوپلمنٹ مسز شاہین شفیق نے این بی ایف کے مینیجنگ ڈائریکٹر پروفیسر ڈاکٹر انعام الحق جاوید سے اپنے دورہِ این بی ایف کے موقع پر کیں۔ قبل ازیں معزز مہمان کی آمد پر ایم ڈی نے انھیں خیر مقدم کہا۔ ایم ڈی نے مسز شاہین شفیق کو ادارے کے بارے میں بریفنگ دیتے ہوئے بالخصوص گزشتہ ڈیڑھ برس میں بُک پروموشن کے لیے اٹھائے جانے والے انقلابی اقدمات اور کتاب کو گھر گھر پہنچانے کی منصوبہ بندیوں کے بارے میں آگاہ کیا۔ معزز مہمان نے ڈاکٹر انعام الحق جاوید کی ادارے کے لیے کی جانے والی کوششوں کی تعریف کی۔ انہوں نے این بی ایف ہیڈ آفس میں نیشنل بُک میوزیم، ریڈرز کلب، بُک پارک، بُک شاپ، سمر کلب اور مائی بُک شیلف کا دورہ کیا اور کہا کہ نیشنل بُک فاؤنڈیشن میں آ کر محسوس ہُوا کہ یہ جگہ علم اور کتابوں کا بہترین مرکز ہے۔ یہ ایسا دانش کدہ ہے جہاں سے ہر عمر اور ہر طبقے کے لوگ اپنا دامنِ طلب بھر سکتے ہیں۔مسز شاہین شفیق نے بُک میوزیم کو بے حد پسند کیا اور وزیٹرز بُک میں اپنے تاثرات قلم بند کیے۔